ملکی بیورو کریسی میں اختیارات کی جنگ

اسلام آباد
ملکی بیوروکریسی میں اختیارات کی جنگ شدت اختیار کر گئی ہے اور شریف برادران کی حمایت یافتہ بیوروکریسی نے وفاق اور پنجاب میں بڑی تعداد میں اپنے ہم خیال افسران کو تعینات کروانے میں کامیابی حاصل کر لی ہے، جب کہ بقایا ٹارگٹ پوسٹنگز پر ہم خیال افسران اور استاد اعظم فواد حسن فواد کے شاگردوں کی بڑی تعداد کو شاگرد خاص سیکریٹری اسٹیبلشمنٹ ڈاکٹر اعجاز منیر مبینہ طور پر تعینات کر اور کرا رہے ہیں۔ دوسری طرف بیوروکریسی کا دوسرا بڑا گروپ جو خان اعظم، اعظم خان کی قیادت میں پی ٹی آئی حکومت کے وژن کے مطابق کام کرنے کی کوشش میں مصروف ہے کو قابل اعتماد افسران کی کمی کا سامنا ہے اور ان کے قریبی چند ایک قابل اور اہل افسران کو بہت ذہانت سے سائیڈ لائن کرایا گیا ہے۔ مصدقہ ذرائع کے مطابق سیکرٹری اسٹبلشمنٹ اعجاز منیر پوسٹنگ ٹرانسفرکیلئے فواد حسن فواد سے مشاورت کرتے ہیں اور انہی کے گروپ کو اہم عہدے دئیے جارہے ہیں۔اعجاز منیر خود شہباز شریف حکومت میں سیکرٹری ہیلتھ اور سیکرٹری سروسز جبکہ پی ایم آفس میں سیکنڈ ان کمانڈ تھے۔کیپٹن عثمان بھی اسی گروپ کا حصہ ہیں اور انہوں نے ہائیکورٹ میں موجودہ حکومت کو۔کورونا پھیلاؤ کا ذمہ دار قرار دیا جبکہ لاہور میں سات لاکھ مریضوں والی سمری بھی لیک کر کے حکومت کو دھچکا دیا۔ اعظم سلیمان گریڈ بائیس میں ہونے کے باوجود شہباز شریف کے ساتھ پانچ سال ہوم سیکرٹری رہے۔مومن آغا پچھلے سال نواز پلیٹ لیس معاملے کے دوران سیکرٹری صحت تھے، جبکہ نبیل اعوان چار سال پی ایس ٹو نوازشریف رہے۔بیوروکریٹس کے اس”شاگرد گروپ“ کو حکومت کے منفی تاثر کو اجاگر اور رائے عامہ کو گمراہ کرنے کا ٹاسک دیا گیا ہے جس کے اثرات پے در ہے واقعات میں ظاہر ہر رہے ہیں۔ معلوم ہوا ہے پنجاب میں اعلیٰ سطحی پے در پے تبدیلیاں استاد اعظم کی ہدایات پر شاگردوں کے گروپ کی ہی کارروائی ہے۔ ۔دوسری جانب اعجاز منیر نے ہمسایہ ماں جایا کے معقولے پر عمل کرتے ہوتے ہوئے اپنے بچپن کے پڑوسی شہباز شریف کے قریبی افسر سابق ڈی جی ایل ڈی اے اور سیکرٹری معدنیات ڈاکٹر ارشد کو ایڈیشنل سیکرٹری فنانس لگوا دیا ہے۔ ادھر فواد حسن فواد نے شاگرد خاص ڈاکٹر اعجاز منیر کو وزیر اعظم کے پرنسپل سیکرٹری اعظم خان کا منصب”ہتھیانے“ کے لیئے بھی حکمت عملی سے آگاہ کر دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق پچھلے دنوں”سزا یافتہ“سابق وزیر اعظم نواز شریف کے چہیتے”جیل یافتہ“پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد نے نیب آفس میں اپنے ہونے والے سمدھی کی موجودگی میں سیکرٹری اسٹیلشمنٹ اعجاز منیر سے دو طویل ملاقاتیں کیں جس میں انہیں وزیر اعظم عمران خان کے”خان اعظم “کی جڑیں کاٹنے کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔ معلوم ہوا ہے ڈرافٹ کے تحت اعظم خان کیخلاف”سلو پوائزننگ“کا آغاز کر دیا گیا ہے جس میں وقت کے ساتھ ساتھ شدت لائی جائیگی۔ادھر اعجاز منیر نے ہائی پاور پروموشن بورڈ کے ذریعے بائیس سکیل پر چند ”جانشین“تیار کر لئے ہیں، جو ترقی کے بعد استاد اعظم کے وژن پر کام کریں گے۔

About ویب ڈیسک

Check Also

چیف کمشنر کو اثاثہ جات ڈکلیئر کرنے کا حکم

اسلام آباد() اسٹیبلشمنٹ ڈویژن نے سروس جوائن کرنے سے اب تک اپنے اثاثہ جات ڈکلیئر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے