دنیا بدل گئی ملکی سلامتی مضبوط معیشت سے جڑی ہے، احسن اقبال

کراچی: وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال کا کہنا ہے کہ سی پیک سے خطے کی اہمیت میں بھی اضافہ ہوگا۔ سی پیک سے خطے کی اہمیت میں بھی اضافہ ہوگا۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا کہ کوسٹل ایریا کیلیے حفاظتی اقدامات انتہائی ضروری ہیں۔ کوسٹ گارڈ کو سمندری راستے سے اسمگلنگ کی روک تھام سخت کرنے کی ہدایت کی ہے۔ دنیا بہت بدل چکی اب ملک کی سلامتی کا دارومدار مضبوط معیشت پر ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا میں تبدیلیاں آرہی ہیں۔ ضروری ہے کہ اپنے کوسٹل ایریا کو محفوظ بنائیں۔ کوسٹ گارڈ زکو اسمگلنگ کی روک تھام سخت کرنے کی ہدایت کی ہے۔ ضروری ہے کہ سمندر کو محفوظ بنائیں۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ دیکھا گیا کہ دہشت گرد سمندری راستے استعمال کرتے ہیں۔ پاکستان کی سرحدوں پر بارڈر مینجمنٹ بہتر کریں گے۔ اسمگلنگ ہماری معیشت پر منفی اثرات مرتب کرتی ہے۔ انہوں نے کراچی میں امن و امان کی صورت حال پر بات کرتے ہوئے کہا کہ خواجہ اظہار پر حملے کے بعد سامنے آنیوالے دہشتگردوں کے نئے گروپ کا کافی حد تک خاتمہ کردیا ۔ تعلیمی اداروں میں طلبا کی موثر نگرانی ،رابطے کا نظام وضع کرنے کی تجویز دی ہے۔ سوشل میڈیا پر دہشتگرد گروہ نوجوانوں کو اپنی جانب راغب کرکے بہکا دیتے ہیں چند ایک لوگ مفرور ہیں انہیں بھی پکڑ لیں گے۔ اس گروپ کے خلاف کریک ڈاؤن کیا ہے۔ جلد اس گروپ کے خاتمے کی خوش خبری سنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کی آج کل رسائی سوشل میڈیا پر ہے۔ ہائی ایجوکیشن کمیشن اساتذہ اور طلبہ پر نظر رکھے۔ ایک سوال کے جواب میں وزیر داخلہ نے کہا کہ چودھری نثانے جہاں کام چھوڑا ہے ہم وہاں سے آگے لیکر جارہے ہیں۔ حکومت اور عسکری ادارے مل کر آپریشن ردالفساد کو کامیاب کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ کراچی کے امن کے لیے رینجرز کا ابہت اہم کردار ہے اور رینجرز اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔ انہوں نے آئی جی سندھ کی تقرری پر جنم لینے والے تنازع پر افسوس کا اظہار کیا اور کہا کہ تمام اداروں کو مل جل کر کام کرنا چاہئے۔ امن و امان کے قیام میں پولیس اور دوسرے ادارے مل کر بہت بہتر نتائج دے سکتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں