چیئرمین نیب نے وزیراعلیٰ پنجاب کے بیان کا جواب دے دیا

لاہور: چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے خبردار کیا ہے کہ نیب کوکرپٹ کہنے والوں کواقتدار میں رہ کرایسا کیوں نظرنہیں آیا،وزیراعلیٰ پنجاب نےگزشتہ روزکہا نیب ایک کرپٹ ادارہ ہے،اب میں نے چارچ سنبھالا ہے تو نیب کو کرپٹ کہنے کا کیا مطلب؟ ریفرنسزمیں انصاف کے تقاضے پورے کریں گے،تمام فیصلے خود میرٹ پر کروں گا۔ انہوں نے وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف کے بیان پرردعمل کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ کےاحکامات آئین کےتحت تمام اداروں پرلاگو ہوتے ہیں۔ میں نیب کے ادارے کو ٹھیک کروں گا۔ تمام فیصلے خود میرٹ پر کروں گا۔ ریفرنسزمیں انصاف کے تقاضے پورے کریں گے۔ تمام ریفرنسزکی خود نگرانی کروں گا۔

چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا کہ اب میں نے چارچ سنبھالا ہے تو نیب کو کرپٹ کہنے کا کیا مطلب؟ چیئرمین نیب نے کہا کہ اب جہاں کرپشن کاسرانظر آئےگا وہاں پر نیب جائے گا۔ انہوں نے دو ٹوک الفاظ میں‌ کہا کہ نیب کرپشن کے خلاف ہر جگہ پر پہنچے گا اور تمام چھوٹے بڑے افراد کا سیاست سے بالاتر ہو کر احتساب ہوگا. اگر کسی کو فکر ہے تو اس پر کچھ نہیں کہا جاسکتا. نیب اپنا کام دیانتداری سے کرے گا اور تمام پیشہ وارانہ صلاحیتیں بروئے کار لائی جائیں‌گی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں