ابھی تو پلوں سے پانی گزرنا باقی ہے، شیخ رشید

اسلام آباد: عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کا کہنا ہےکہ فرد جرم کے فیصلے سے ثابت ہوتا ہےکہ ابھی قانون اور انصاف زندہ ہے۔ اسلام آباد کی احتساب عدالت نے نیب کی جانب سے دائر لندن فلیٹس ریفرنس پر میاں نوازشریف، مریم نواز اور ان کے شوہر محمد صفدر پر فرد جرم عائد کردی ہے۔ فرد جرم پر اپنے رد عمل کے اظہار میں نجی ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر پر فرد جرم قانون اور آئین پر عملدرآمد کی روشن مثال ہے، یہ فیصلہ اس بات کی شہادت ہے کہ ابھی قانون اور انصاف زندہ ہے۔ شیخ رشید نے کہا کہ کسی عدالت پر تنقید نہیں کی اور نیب کی کارروائی پر کوئی شبہ نہیں، ابھی تو پلوں سے پانی گزرنا باقی ہے، یہ ہماری لوٹی ہوئی دولت ہمیں ہی دکھاتے ہیں، عدلیہ فیصہ نہ کرتی تو ملکوں میں خانہ جنگی ہوتی ہے۔

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ایک فری سائز پارٹی ہے، اس میں 42 ممبر مشرف لیگ کی پیداوار ہیں، جو مشرف کے ساتھ بک سکتے تھے وہ (ن) لیگ کے لیے بھی بک سکتے ہیں، اس وقت شہبازشریف کے لیے سنہری موقع تھا لیکن اس کے باوجود ان کو اہمیت نہیں ملی، مریم نواز اور کلثوم نے شہبازشریف کا راستہ روکا۔ انہوں نے مزید کہا کہ نوازشریف فوج کے خلاف زبان استعمال کررہے ہیں اور وہ اپنے بغیر کسی الیکشن پر یقین نہیں رکھتے جب کہ نوازشریف کے خلاف جو فیصلہ آیا اس پر کسی نے نہیں کہا کہ ججوں نے غلط فیصلہ کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں