شاہد خاقان عباسی کیلئے مریم نواز سب سے بڑا خطرہ ہیں، حامد میر

اسلام آباد:سینئر صحافی اور اینکر پرسن حامد میر نے کہا کہ مریم نواز کا رویہ انتہائی جارحانہ ہے اور وہ شاہد خاقان عباسی کے لئے سب سے بڑا خطرہ ہیں، اگر حکومت اپنا وقت پورا کرنا چاہتی ہے تو انہیں اپنی روش بدلنا ہوگی۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے حامد میر کا کہنا تھا کہ مریم نواز اداروں کے خلاف انتہائی جارحانہ اور سخت رویہ اپنائے ہوئے ہیں۔ اگر ان کا رویہ جاری رہا تھا سول سوسائٹی اور وکلا ان کا کیس کراچی منتقل کرنے کا مطالبہ کر سکتے ہیں۔ اسلام آباد اور لاہور کی نسبت کراچی میں ان کے مقدمے کی سماعت انتہائی خطرناک ہو سکتی ہے، کیوں کہ سندھ میں پیپلز پارٹی کی حکومت ہونے کے باوجود ڈاکٹر عاصم کو بکتر بند گاڑی میں ڈال کر پیشی کے لئے لے جایا جاتا تھا اور انہیں انتہائی سخت تفتیش کا سامنا کرنا پڑا جبکہ پیپلز پارٹی ان کے لئے کچھ بھی نہیں کرسکی۔

حامد میر نے کہا ہے کہ اگر ملک میں ٹیکنو کریٹ حکومت آئی یا موجودہ حکومت کو مدت پوری ہونے سے پہلے ہٹا دیا گیا تو یہ نواز شریف کی سب سے بڑی فتح ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی نااہلی کے وقت مسلم لیگ ن کے ایم این ایز کی ایک بڑی تعداد نواز شریف کا ساتھ چھوڑنے کو تیار تھی، ان کی قیادت کے لئے ان دنوں پریس کانفرنسیں کرنے والے ایک ممبر قومی اسمبلی بھی تیار تھے مگر ان ایم این ایز کو جمع کرنے کے لئے کوشش نہیں کی گئی۔

حامد میر نے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ مسلم لیگ ن کا فاروڈ بلاک اس وقت قائد کی تلاش کر رہا ہے۔ انہیں مریم نواز اور چوہدری نثار کسی بھی صورت میں قبول نہیں ہیں ، وہ چاہتے ہیں کہ شہباز شریف مسلم لیگ ن کی قیادت کریں مگر شہباز شریف کا مسئلہ یہ ہے کہ جب وہ ان ایم این ایز سے ملتے ہیں تو کہتے ہیں کہ میں آپ کے ساتھ ہوں مگر جب وہ نواز شریف سے ملتے ہیں توان کی بولتی بند ہو جاتی ہے۔ اسی کشمکش کی وجہ سے شہباز شریف کوئی فیصلہ نہیں کر پارہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں