پچپن ن لیگی ارکان اسمبلی قیادت سے ناراض

اسلام آباد : ن لیگ کے 55 ارکان قومی اسمبلی لیگی قیادت کی پالیسیوں سے نالاں، درجن سے زائد ارکان نے چوہدری شجاعت سے رابطہ کرلیا۔ یہ انکشاف سینئر صحافی نے نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی پالیسیوں خصوصاً ختم نبوت کے معاملے کے بعد بڑی تعداد میں حکومتی ایم این ایز تنگ آچکے ہیں، درجن سے زائد ارکان اسمبلی نے ق لیگ کے سربراہ چوہدری شجاعت سے رابطہ کیا ہے۔ واضح رہے کہ انٹیلی جنس بیورو (آئی بی) کی جانب سے دہشتگردوں کے تعلقات کے حوالے سے مرتب کی گئی مبینہ فہرست میں کئی حکومتی وزرا اور ارکان اسمبلی کے نام شامل ہیں۔ اس معاملے پر جمعرات کے روز وفاقی وزیر کھیل و بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیر زادہ نے اپنی ہی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا اور آئی بی کی فہرست میں شامل ارکان کو ساتھ لے کر اسمبلی اجلاس سے واک آؤٹ کرگئے تھے۔

دوسری جانب مسلم لیگ ن کے ذرائع نے ایسی خبروں‌کو بے بنیاد قرار دیا ہے اور وضاحت کی ہے کہ ایک خاص میڈیا گروپ اپنے مذموم مقاصد کے لیے حکومتی جماعت میں‌ اختلافات کی خبروں کو ہوا دے رہا ہے. اس چینل کے حوالے سے پیمرا تحقیق کر رہا ہے اور جھوٹی خبروں‌ کی وجہ سے ملک میں‌ انتشار پھیلانے کے مرتکب افراد کے خلاف کارروائی کی جائے گی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں