بلوچستان کے علاقے جھل مگسی میں‌ درگاہ پر دھماکہ

جھل مگسی:جھل مگسی کے درگاہ فتح پور میں خود کش دھماکہ ہونے سے12افراد شہید جبکہ2پولیس اہلکاروں سمیت متعدد 25افرادزخمی ہوگئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق جھل مگسی درگارہ فتح پور کے قریب دھماکہ ہوا ہے،ایم ایس جھل مگسی ڈاکٹر رخسانہ کا کہنا ہے کہ تاحال ان کے پاس 6 لاشیں لائی گئی ہیں جبکہ 25 زخمیوں کو بھی لایا گیا ہے جن میں سے اکثر کی تعداد انتہائی تشویشناک ہے ۔ مقامی پولیس کے مطابق درگاہ کے مرکز ی دروازے پر پولیس چیکنگ کے دوران ایک خود کش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑایا۔خود کش حملے کے وقت درگاہ فتح پور میں پندرہویں کا میلہ جاری تھا۔ ریسکیو حکام کے مطابق ہلاک اور زخمی ہونے والے افراد کی تعداد میں مزید اضافے کا خدشہ ہے۔

وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی کا کہنا ہے کہ جھل مگسی میں درگاہ فتح پور شریف میں ہونے والے دھماکے کی نوعیت کے بارے میں کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہے ،اس حوالے سے معلومات حاصل کی جا رہی ہیں۔جس کے بعد ہی بتایا جا سکے گا کہ دھماکہ خود کش ہے یا پلانٹڈ۔وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ بظاہر لگ رہا ہے کہ دھماکے میں سیکورٹی اہلکاروں کو نشانہ بنا یا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق دھماکہ خود کش تھا ،جس کے نتیجے میں ابتدائی اطلاعات کے مطابق بارہ افراد شہید اور کئی زخمی ہوئے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں